مظفر پور بینک آف انڈیا سے مسلح جرائم پیشہ افرار نے 13 لاکھ 61 ہزار روپے لوٹ کر فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے

0 122

 

عبدالخالق القاسمی

مظفر پور/ صدر پولیس اسٹیشن حلقہ میں واقع بینک آف انڈیا کی بھگوان پور برانچ سے چار مسلح ڈاکوؤں نے 13.61 لاکھ روپے لوٹ لئے۔ یہ واقعہ بدھ کی سہ پہر ڈھائی بجے کے قریب پیش آیا۔ ڈکیتی کا یہ واقعہ 10 منٹ کے اندر انجام دیا گیا۔بینک سے فرار ہونے کے بعد،تمام مجرم فائرنگ کرنے اور سائڈ اسٹریٹ سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔ چاروں شرپسند، جو لوٹ مار کی نیت سے پہنچے،اور بینک میں گھس آئے اور گارڈ کو پکڑا اور اس کی بندوق چھین کر۔اس کے ساتھ مار پیٹ شروع کردیا زدوکوب کرنے کے بعد منیجر جے پی یادو کے چیمبر کی طرف بڑھا اور چیمبر کا شیشہ توڑ دیا اور اس سے چابی کا مطالبہ کیا۔منیجر نے کہا چابی اسسٹنٹ منیجر کے پاس ہے,اس کے بعد ڈاکوؤں نے گولی. مارنے کی دھمکی دیکر ان سے چابی لے لی۔اور کیشیئر کے پاس محفوظ 11 لاکھ روپے اور دوسری جگہوں سے 61 ہزار روپے لوٹ لئے۔بینک میں موجود صارفین کو بھی اچکوں نے نہیں چھوڑا ان سے بھی لوٹ مار کیا گیا۔اور ان کے پیسے بھی چھین لیا, لٹیرے نے گارڈ کی بندوق بینک میں چھوڑ دی،لیکن کارتوس اپنے ساتھ لے کر چلے گئے,واضح رہے کہ مظفرپور میں چوری,لوٹ مار اور قتل و غارت گری عام بات ہوگئی ہے,اس طرح کے واقعات آئے دن مظفرپور شہر سمیت دیہی حلقوں میں بھی پیش آتی رہتی ہے,یہاں جرائم پیشہ افراد کے حوصلے اتنے بلند ہیں کہ سی ایم نتیش کمار مظفرپور میں ہوتے ہیں اور لٹیرے کیش ویں میں رکھے پیسے اڑا لے جاتے ہیں,ایسے میں حکومت کو اس معاملے میں سنجیدگی سے غورو فکر کرنے کی ضرورت ہے,نہیں تو روز بینک لٹتے رہینگے,گولیاں چلتی رہینگے اور جرائم پیشہ افراد کے حوصلے بلند رہینگے اور انتظامیہ ہاتھ پر ہاتھ دھرے خاموش تماشائی بنی رہیگی,ضرورت اس بات کی ہیکہ سریع الحرکت فورس کی شہر کے حساس جگہوں پر چوکسی بڑھائی جائے,اور بینک میں حفاظتی دستہ بڑھایا جائے,تبھی جرائم پیشہ افراد پر نکیل کسی جا سکتی ہے

Leave A Reply

Your email address will not be published.