Select your Top Menu from wp menus

اردو اسکول کے بارے میں اقلیتی کمیشن کا آرڈر

اردو اسکول کے بارے میں اقلیتی کمیشن کا آرڈر

نئی دہلی: شری رام کالونی شاہدرہ میں تقریباً دس سال کی محنت کے بعد ایک اردو میڈیم اسکول بنا اور اس کی تعمیر شدہ عمارت پر “مشرقی دہلی میونسپل کارپوریشن اردو پرائمری اسکول “لکھا ہوا ہے۔ لیکن مشرقی دہلی میونسپل کارپوریشن اب اس اسکول کو انگلش میڈیم اسکول میں بدلنا چاہتی ہے جبکہ علاقے کے بہت سے لوگ ، جو عرصہ سے اس کے لیے جدوجہد کررہے تھے ، اسے اردو میڈیم اسکول کی صورت میں دیکھنا چاہتے ہیں۔ علاقے کے ایک ہزار لوگوں نے دہلی اقلیتی کمیشن میں شکایت درج کرائی اور مطالبہ کیا ہے کہ مذکورہ اسکول کو اردو میڈیم ہی رکھا جائے۔ اس معاملے کے بارے میں سخت اور سنجیدہ رویہ اپناتے ہوئے دہلی اقلیتی کمیشن نے آرڈر پاس کیا ہے جس میں مذکورہ اردو میڈیم اسکول کو انگلش میڈیم اسکول بنانے کے فیصلے کو “غیر قانونی اور منمانی “فیصلہ قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ یہ فیصلہ “علاقے کے باشندوں سے مشورہ کیے بغیر لیا گیا ہے”۔ دہلی اقلیتی کمیشن نے مشرقی دہلی میونسپل کارپوریشن کے محکمہ تعلیم کو آرڈر جاری کیا ہے کہ مذکورہ اسکول کے میڈیم میں کوئی تبدیلی نہ کی جائے اور اسے آنے والے تعلیمی سال سے ہی اردو میڈیم اسکول کے طور سے کھولا جائے۔

HTML Snippets Powered By : XYZScripts.com