Select your Top Menu from wp menus

مولاناصبغتہ اللہ قاسمی،خدارسیدہ عالم دین تھے: بلال احمد رحمانی

عبدالخالق القاسمی/اسٹارنیوزٹوڈے
مظفرپور 13فروری
ہندوستان کی مشہور تعلیم گاہ جامعہ رحمانی خانقاہ  مونگیربہارکے ناظم اعلی حضرت مولانا صبغتہ اللہ قاسمی ر حمتہ اللہ علیہ  (سرجاپورسوپول)اس دنیامیں نہیں رہے،اناللہ واناالیہ راجعون,ان کے انتقال پرملال پرجامعہ رحمانی خانقاہ مونگیرکے فاضل جناب مولانا بلال احمد رحمانی، مصراولیا اورائی مظفرپور نے گہرے رنج وغم کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ حضرت مولانا صبغتہ اللہ صا حب قاسمی علم وعمل کے عظیم پیکرتھے ،زندگی بہت سادہ،بہت محتاط، اور بڑے قناعت پسند تھے بظاہر معمولی انسان نظر آتے تھے مگر حقیقت میں خدا رسیدہ تھے، وہ ایک کامیاب منتظم بھی تھے،مشہور تعلیم گاہ جامعہ رحمانی خانقاہ مونگیربہارکے ناظم اعلی کے پروقار منصب پرفائزتھے،انہوں نے جامعہ رحمانی کے ذریعہ دین کی قابل قدرخدمت کی ،امیرشریعت حضرت مولانا منت اللہ رحمانی، قاضی شریعت حضرت مولانا مجاہدالاسلام قاسمی قدس سرھما جیسی شخصیات کوبھی حضرت ناظم اعلی پربڑااعتماد تھا، موجودہ امیرشر یعت حضرت مولانا محمد ولی رحمانی صا حب دامت برکاتہم سجادہ نشیں خانقاہ رحمانی بھی ان کے بڑے قدرداں تھے،بلاشبہ ان کا انتقال نہ صرف جامعہ رحمانی کے لیے بلکہ علمی دنیاکے لیے عظیم خسارہ ہے، اللہ تعالی ان کے حسنات کو قبول فرمائے، درجات کوبلندفرمائے اورتربت کوٹھنڈارکھے آمین، مدرسہ احمد یہ کریمیہ مصراولیا اورائی مظفرپور میں انکے لیے اہتمام کے ساتھ ختم قرآن وایصال ثواب کیاگیا-
  • 1
    Share
  • 1
    Share