پبلک اسکولوں پرکسان یونین کرے گی تالابندی

0
مظفرنگر22ستمبرشاہدحسینی
کروناجیسی مہلک بیماری کے چلتے بندرہے اسکولوں کے درمیان کی تعلیمی فیس جمع کرانے کے لٸے بچوں اوران کے والدین پراسکول انتظامیہ کی جانب سے دباٶ بنایاجارہاہے جس کی وجہ سے بچے اور ان کے والدین ذہنی الجھن میں ہیں اسی کے خلاف آج
کسان یونین کے صوباٸی جنرل سکریٹری محبوب انصاری کی سربراہی میں ودیگرعہدیداران نے مظفرنگرضلع مجسٹریٹ کوایک میمورنڈم پیش کیامیمورنڈم میں مطالبہ کیاگیاہے کہ پبلک اسکولوں میں طلبہ وطالبات سے کرونابیماری کے درمیان تعلیم منسوخ ہونے کے باوجود فیس کامطالبہ کیاجارہاہے جونہیں ہوناچاہٸے اسی طرح بچہ ایک اسکول سے دوسرے اسکول میں داخلہ چاہتاہے جہاں اس کوپہلے اسکول کی تعلیمی سرٹیفکیٹ چاہٸے جس کواسکول کے پرسنپل دینے سے انکارکررہے ہیں ان حالات میں طلباکی تعلیم خطرے میں مستقبل تاریک نظرآرہاہے اسی طرح اسکول میں طلباپرماسک سینیٹاٸزر اور ڈریس کے لٸے دباٶ بنایاجارہاہے ان سب حالات کی وجہ سے طلبااور ان کے والدین دماغی الجھن میں ہیں پچھلے دوسالوں کرونابیماری کی وجہ سے ہرطبقہ کے لوگ پریشان ہیں آمدکے ذراٸع بند ہیں
کسان یونین نے ضلع مجسٹریٹ سے درخواست لگاتے ہوٸے کہاہے کہ اسکولوں کے تمام پرنسپلوں گوآگاہ کیاجاٸے کہ بچوں کوکسی بھی طرح پریشان نہ کیاجاٸے اگراس کے بعد اسکول اس پرعملدرآمد نہیں ہوتے ہیں توکسان یونین ان کے خلاف قدم اٹھانے پرمجبور ہوگی

Leave A Reply

Your email address will not be published.